جامعہ مقسوم العلوم بھگوتی پور میں تقریب ختم بخاری شریف کا پرگرام منعقد

49

جامعہ مقسوم العلوم بھگوتی پور میں تقریب ختم بخاری شریف کا پرگرام منعقد
دھن گھٹا سنت کبیر نگر 5 جنوری
عقیل احمد خان
جامعہ مقسوم العلوم نسواں بنات اسلام کی تعلیم و تہذیب کا ایک موقر ادارہ ہے جس کے بانی الحاج نصیب اللہ خان مرحوم تھے اور اپنی رفیقہ حیات حجن مقسوم بی کے نام سے معنون کیا تھا فی الحال جس کے ناظم شفیق احمد اور محترم الحاج رفیق احمد صاحبان ہیں الحمد للہ ادارہ میں دور حدیث تک کی باضابطہ تعلیم ہوتی ہے اور فاضلات کوسندِفراغت و فضیلت دی جاتی ہے اور یہ تمام تر حصولیابیاں صدر معلمہ محترمہ فاطمہ الزہرا صالحاتی و دیگر معلمات کی شب و روز کدوکاوش کا ثمرہ ہے بخاری شریف کی آخری حدیث کا درس دینے کے لیے ملک کے ممتاز علماء کرام کو مدعو کیا جاتا ہے جن کی درس و دعا سے بخاری شریف کی تکمیل ہوتی ہے ماشاء اللہ اس قدیم روایت کو باقی رکھتے ہوئے اس سال فارغ ہونے والیاں سات طالبات (صائمہ بنت عبدالغفار ناون. فہیمہ بنت محمد اسلم بھگوتی پور. عشرت بنت ریاض احمد بھگوتی پور. فاطمہ بنت قاری ساجد بسیاں. عائشہ بنت مقصود بھگوتی پور. شگفتہ بنت حفیظ اللہ )کو بخاری شریف کا آخری درس دینے کے لیے 4 فروری2021 بروز جمعرات بعد نماز مغرب روح پرور بزم کا انعقاد ہوا جس کی صدارت حضرت مولانا مقبول احمد دامت برکاتہم جونپوری نے فرمائی قرأت کا فریضہ دارلفلاح ممبرا ممبئی کے مشہور استاذ تجوید القراۃ جناب حافظ و قاری ساجد صاحب نے انجام دیا جبکہ نظامت کے فرائض مولانا محمد وسیم قاسمی ندوی نے بخوبی انجام دیا اور مدح خیرالانام کے لیے صوبۂ بہار سے آئے ہوئے جناب اشفاق کریمی اچھوتے انداز میں نعت نبی پڑھ کر سامعین کے دل کو روشن کیا جناب حضرت مولانا عبدالواحد قاسمی و مولانا مستقیم صاحبان ناظم معراج العلوم نے اپنے بیان میں ادارہ کی خدمات کو سراہا اور جناب حضرت مولانا مفتی محبوب احمد قاسمی نے حدیث پر روشنی ڈالی ہے اور صوبہ بہار سے آئے ہوئے مہمان خصوصی جناب حضرت مولانا طارق انور قاسمی مدظلہ العالی نے اصلاح معاشرہ کے موضوع پر خطاب فرمایا اور حضرت مولانا قاری لئیق احمد نے اور شاعر جناب اسد مہتاب نے بھی کلام سنا کر سامعین کے دلوں کو تازگی بخشی اور درس و دعا کے لئے صوبہ بہار کے ممتاز علمی دینی درسگاہ دارالعلوم بالاساتھ سیتامڑھی کے استاذ حدیث جناب حضرت مولانا شوکت علی صاحب قاسمی مدظلہ العالی نے بخاری شریف کی آخری حدیث پاک کا درس دیا مہمان محترم نے حدیث پاک کی سند اور وزن اعمال جو اہل سنت والجماعت کا متفق علیہ عقیدہ ہے جس پر امام بخاری نے اپنی کتاب کی تکمیل فرمائی تفصیلی گفتگو فرمایا نیز آغاز و اختتام کی مناسبت سے امام بخاری اور بخاری شریف کی مقبولیت اور دوسرے اہم نکات پر روشنی ڈالی اور انہیں کی دعا سے پروگرام حسن اختتام کو پہنچا اس پروگرام کو کامیابی کی منزل تک پہنچانے میں جناب حضرت مولانا شاہد حسن قاسمی ناظر کی معیت میں ڈاکٹر اطہر رحمانی صاحب جناب علی اصغر صاحب طفیل احمد صاحب حافظ امجد حافظ ابو ذر اور حافظ فیضان اور محبوب عالم نے اہم رول ادا کیا ہے مقام شکر ہے کہ کے علاقے کے مسلمان مرد و خواتین کی کثیر تعداد نے شرکت کاشرف حاصل کیا جن میں بطور خاص حضرت مفتی سعید صاحب مہتمم مدرسہ معین الاسلام چھیتہی حضرت مولاناابوالحسن مظاہری صدرالمدرسین مدرسہ سراج العلوم مڑھا راجا حضرت مولانا ثناء اللہ صاحب حلیمی مدرسہ مصباح العلوم روضہ اور سماجی کارکن جناب مسلم پردھان اور نوجوانوں کی ایک مکمل جماعت شریک رہی اور جامعہ کے بانی کے خانوادے اور جملہ مومنین اور مومنات کی مغفرت و ترقی درجات اور ملک میں امن و امان اور سلامتی کے لئے دعا کی گئی