بہار اسمبلی انتخابات سے پہلے جے ڈی یو کو بڑا جھٹکا

27

بہار میں ہونے والے اسمبلی انتخابات سے پہلے جنتا دل یونائیٹڈ ( جے ڈی یو ) کو بڑا جھٹکا لگتا نظر آرہا ہے ۔ بہار سرکار میں وزیر اور پارٹی کے دلت چہرہ شیام رجک نے پارٹی چھوڑنے کا اعلان کردیا ہے ۔ اطلاعات کے مطابق شیام رجک گزشتہ کئی دنوں سے پارٹی میں اپنی نظراندازی سے پریشان تھے اور اس وجہ سے انہوں نے پارٹی چھوڑنے کا فیصلہ کیا ہے ۔
نیوز 18 کو ملی جانکاری کے مطابق شیام رجک پارٹی چھوڑنے کے بعد پھر سے اپنے پرانے گھر یعنی آر جے ڈی میں شامل ہوں گے ۔ حالانکہ اس کی آفیشیلی تصدیق باقی ہے ۔ شیام رجک پیر کو بارہ بجے اسمبلی اسپیکر کے پاس جاکر پارٹی کی رکنیت سے بھی استعفی دیں گے ۔ بہار میں ہونے والے اسمبلی انتخابات سے پہلے اس کو جے ڈی یو کیلئے بڑا جھٹکا مانا جارہا ہے ۔
لالو پرساد کے خاص تھے رجک

بتادیں کہ شیام رجک کو کسی زمانے میں لالو پرساد یادو کا خاص کہا جاتا تھا اور ان کے ساتھ رام کرپال یادو کی جوڑی لالو کے رام شیام کے طور پر مشہور تھی ۔ رجک لالو یادو کے قریبی تھے ، اس کا اندازہ اسی بات سے لگایا جاسکتا ہے کہ وہ بہار کی رابڑی دیوی حکومت میں کابینہ میں شامل تھے

شیام رجک سال 2009 میں جے ڈی یو میں شامل ہوگئے تھے ۔ وہ 2010 میں جے ڈی یو کے کوٹے سے ممبر اسمبلی بنے اور وزیر بنے ، لیکن جب رجک سال 2015 میں عظیم اتحاد سے ممبر اسمبلی بنے تھے ، تو ان کو نتیش حکومت میں وزیر نہیں بنایا گیا تھا ۔ آر جے ڈی کا ساتھ چھوڑ کر بی جے پی کے ساتھ آنے پر رجک کو نتیش کمار نے پھر سے وزیر بنایا تھا ۔ ایسے میں یہ قیاس آرائی کی جارہی ہے کہ شیام رجک الیکشن سے پہلے ایک مرتبہ سے اپنے پرانے گھر یعنی آر جے ڈی کا رخ کرسکتے ہیں ۔