کشمیر میں کویوڈ 19 کے بڑھتے معاملات

34

جموں و کشمیر میں کووڈ کے تیزی سے بڑھتے نئے معاملات دیکھتے ہوئے حکومت نے 23 جولائی کو پھر سے پابندیاں عاید
کردیں ۔ 24 دنوں تک چلی یہ پابندیاں اب ختم کی جا رہی ہیں ۔ لیکن کووڈ معاملات کی تعداد میں کمی کے آثار کہیں نظر نہیں
آرہے ہیں ۔ پچھلے چوبیس دن میں 247584 کووڈ ٹیسٹ کئے گئے ، جن میں سے روزانہ 512 کی اوسط سے کل 12310 نئے کووڈ مثبت معاملات درج کئے گئے ۔ ان معاملات میں سے 75 فیصد کشمیر وادی میں اور 25 فیصد جموں سے سامنے آئے ۔کل ٹیسٹوں میں مثبت فیصد دیکھا جائے تو یہ 4.97 فیصد رہا ۔

دارلحکومت سرینگر سب سے زیادہ متاثر ہے ۔سرینگر میں کل مثبت معاملات کا 31 فیصد ، ایکٹیو پازیٹیو معاملات کا تیس فیصد اور کل اموات کا پینتیس فیصد درج کیا گیا ہے ۔ تاہم ایک اچھا پہلو یہ بھی ہے کہ اس عرصہ کے دوران صحتیاب ہورہے مریضوں کی تعداد میں کافی اضافہ ہوا ہے اور صحت یاب ہوئے مریضوں کی تعداد ایکٹیو مریضوں سے تین گنا سے زاید ہے ۔

جموں و کشمیر میں 15 اگست کو کل 28021 کووڈ مثبت معاملات پائے گئے ، جن میں سے کشمیر میں 21744 اور جموں صوبہ میں 6277 معاملات درج کئے گئے ۔ صحت یاب معاملات کی تعداد 20676 اور اموات کی کل تعداد 527 پہنچ گئی ہے ۔اموات اور معاملات ضلع سطع پر دیکھیں تو سب سے زیادہ 171 اموات سرینگر ضلع میں ہیں ۔دوسرا نمبر بارہمولہ کا ہے ، جہاں پر ستاسی ہوئی ہیں ۔ ریاسی اور کشتواڑ دو ایسے اضلاع ہیں جہاں پر ابھی کوئی موت نہیں ہوئی ہے ۔