اب بھی وقت ہے مسلمانوں سدھر جاؤ

24

کوئی بھی پارٹی مسلمانوں کی ہمدرد نہیں ہے ہر پارٹی نے اپنی کرسی بچانے کیلئے کبھی مندر میں گولی چلائی تو کبھی مسجد میں غیر قانونی طریقے سے بت کو رکھوایا، میں کانگریس کے سینئر رہنما جناب دگ وجے سنگھ کا ٹویٹ پڑھا جس میں انہوں نے واضح الفاظ میں لکھا ھیکہ ملک کے سابق وزیراعظم بھی یہی چاہتے تھے کہ رام مندر بنے ، اس خواب کو موجودہ وزیراعظم نے شرمندۂ تعبیر کیا۔

اب بہار کا الیکشن قریب ہے سوچا کہ مسلمانوں کے مسیحا کہے جانے والے،لالو پرساد یادو، کے بیٹا کا وہ بیان یاد دلادوں ،تیج پرتاب یادوں نے کہا تھا کہ ھماری حکومت بنتی ہے تو ہماری پہلی کوشش رام مندر تحریک کیلئے ہوگی اور اس کیلئے میں کچھ بھی کر سکتا
مسلمانوں فیصلہ تمہیں کرنا ہے اب بھی وقت ہے مسلمانوں کو چاہیے کہ ان کمینوں کو سبق سکھائیں ،پچھڑوں اور دلتوں کو لیکر اپنی پارٹی کو مضبوط کریں، کیرلا اور حیدرآباد کے مسلمانوں کی کامیابی میں علاقہ کے مسلم پارٹی اھم کردار ہے۔

امید ہیکہ اس بار بہار کے مسلمان ،دلت اور پسماندہ طبقہ نکمی غدار، کرسی کے لالچی پارٹیوں کو سبق سکھائے گی۔