لاک ڈاؤن کے چلتے گھروں میں ادا کی گئی عید الاضحٰی کی نماز

25

مسجد و عیدگاہ میں محدود تعداد میں ہوئی نماز
بچوں کی خوشی رہی پھیکی نو جوان طبقہ دن بھر سو شل میڈیا سے رہا جڑا

سمریاں سنت کبیر نگر (ظفیر کرخی) عالمی کرونا وبا کے درمیان ضلع کے مسلم اکثریتی علاقہ سمر یا واں اور دو داھار میں اعید الفطر کی طرح عید الاضحٰی کی بھی نماز سو شل ڈسٹینسنگ کے ساتھ بروز سنیچر عقیدت و احترام کے ساتھ ادا کی گئی۔ بعد نماز سنت ابراہیم پر عمل کرتے ہوئے بکروں کے قربانی پیش کی۔

علاقہ میں ملک کے مشا ہیر علماء کرام ،ملی تنظیموں کی اپیل اور محکمہ صحت اور ضلع انتظامیہ کے گائیڈ لائن کے مطابق بھیڑ سے بچتے ہوئے زیادہ تر لوگ گھروں میں ہی نماز ادا کی ،محدود تعداد میں گاؤں ،محلے کی مسجدوں و عیدگاہ میں سو شل ڈسٹنس پر عمل کرتے ہوئے نماز پڑھی گئی۔سبھی خاص مقام پر  پولیس انتظامیہ کی طرف سے پولیس کے جوان ڈیوٹی انجام میں لگے رہے۔عیدگاہ پر نہ میلے لگے اور نہ ہی دکانیں سجی۔یہ جگہ بھیڑ سے ویران د کھی۔بروز سنیچر لاک ڈاؤن ہونے کی وجہ سے سبھی چوراہوں اور بازاریں بند رہیں۔


علاقہ بھر میں منائی گئی عید
________
سمر یا واں علاقہ کے باغ نگر ،اسرا شہید،کرہی،دانو کوئیّان ،رکسا،دوداھارا،لہر و لی،مونڈا ڈ یہہ ،دریا آباد،تلجھ،آگیا،صالح پور،اؤنچھرا،پوروا،کہر یا واں،بگرا میر،بجھرا وغیرہ گاؤں میں نماز عید خوشگوار طریقے سے ادا کی گئی۔اس موقع پر ملک میں امن  شا نتی  و ترقّی کے لیے دعا کی گئی۔ساتھ ہی عالمی کرونا وبا سے نجات کے لیے دعا مانگی گئی۔


بچوں کی عید کی خوشی پر گرہن
_______
عید الاضحٰی کے موقع پر بچّے عید کی طرح اس بار بھی خوشی سے محروم رہے۔گھر سے عیدگاہ و میلہ دیکھنے کا خواب ادھو را رہ گیا۔گھر میں ملنے والی عیدی سے اپنے من پسند کے کھلونے ،مٹھائی،آئس کریم  وغیرہ نہیں خرید  سکے۔گھر میں رہ کر گھر والوں کے ساتھ ہی اپنی عید منائی۔


_______ 
سو شل میڈیا بنا ملا قات کا ذریعہ
____________
عید کے روز لاک ڈاؤن کے چلتے بعد نماز لوگ گھر پر رہکر سوشل میڈیا  کے وہاٹس ایپ،فیس بک،ٹویٹر و دوسرے ذرائع پر مشغول رہے۔دن بھر  ملک و بیرون ملک رہ رہے دوست احباب،رشتےدار کو مبارکباد،  دعاو احوال جان نے و بتانے میں مشغول رہے۔ ایک دوسرے کی خوشی میں اسی کے ذریعہ شامل ہوئے۔یہ سلسلہ دیر رات تک جاری رہا۔
_______