فی الفور ہمیں اس ظلم کے خلاف ایکشن لینے کی ضرورت ہے!

13

میرے نیپالی بھائیوں،ہندوستان سے بہت ہی افسوس ناک خبر موصول ہوئی ہے،کہ ہمارے وزیراعظم کےپی اولی شرما کے بھگوان رام کے نیپالی ہونے کے دعوی پر ،ہمارے ایک نیپالی بھائی کو بنارس میں مآب لینچینگ کاشکار بنایا گیا ہے۔
بنارس میں وشوہندو سینا کے صدر اورن پاٹھک نےاپنے درندہ صفت ساتھیوں کی مدد سے ہمارے ایک نیپالی، معصوم ،بےخطا انسان کوپکڑکر خوب زدو کوب کیا،اور ہمارے مظلوم نیپالی بھائی کو بہت ہی کےدردی سے مار رہاتھااور کہلوارہاتھا کہ کہو "بھگوان رام جی”نیپالی نہیں؛ بل کہ ہندوستانی تھے،ان ظالموں نے اسی پر بس نہیں کیا؛بل اس پر مستزاد یہ سرکےبال مونڈ کر ،اس پر”جئے شری رام "کانعرہ لگایا،اور میرا مظلوم چیختا چلاتاتارہا،مگر ان شقی القلب ،درندہ صفت انسانوں نے ایک بھی نہیں سنا۔
واقعی اس خبر نے کافی دل و دماغ کو رنج و الم اور صدما پہنچایاہے،ہم تمام نیپالی بھائیوں کوچاہئے کہ فی الفور اس ظلم و بربریت کےخلاف آواز اٹھائیں، اور ان ظالموں کوجیل میں مقید کروائیں، اور ان کے اس بہیمانہ عمل کابھرپور مزہ چکھلائیں؛ورنہ اگر ہم خاموشی اختیار کرلیےاور اس ظلم کے خلاف ایکشن نہیں لیے،توپھر وہ وقت دور نہیں ہے،کہ ہم تمام نیپالی بھائی فردا فردا اس کے شکار ہوجائیں۔