میں نے صرف اردو میں نہیں عربی میں بھی تحریروں کے بادشاہوں کو پڑھا ہے

46

میں نے صرف اردو میں نہیں عربی میں بھی تحریروں کے بادشاہوں کو پڑھا ہے ، تقریر کے جادو گروں کو سنا ہے ، الفاظ کے شہنشاہوں کو برتا ہے ، فصاحت اور بلاغت کا دریا بہانے والوں کا تجربہ کیا ہے ، مطالعہ اور معلومات کی گمنام اور تاریک سرنگوں میں بے خطر بہت دور تک جانے والے بہت سے لوگوں کا علم ہے ، لیکن خدا اور رسول کو گواہ بنا کر کہنے دیجئے کہ تحریر و تقریر کے لفظ لفظ نہیں ، حرف حرف پر اور ہر زیر و بم پر خلوص کا جو حسن ، ایمان و یقین کی جو مہرتابی ، درد دل کی جو لذت ، انسانوں سے محبت کا جو جمال ، کلمة اللہ کا جو جلال ، صدائے حق کی جو دل نوازی اور سوز دروں کی جو تمازت اور فقر غیور اور زہد پرنور کی جو جاذبیت اور حرارت میں نے ” مولانا علی میاں ” کے یہاں محسوس کی وہ میرے محدود علم و مطالعہ میں کسی کے یہاں نہیں ملی ۔