ہفتہ, 8, اکتوبر, 2022
ہوماعلان واشتہاراتجہیز ونشہ مخالف مہم کا آٹھواں اجلاس اختتام پذیر

جہیز ونشہ مخالف مہم کا آٹھواں اجلاس اختتام پذیر

جہیز و نشہ مخالف مہم کا آٹھواں اجلاس اختتام پذیر

ہزاروں لوگوں نے تحریک کا استقبال کرتے ہوئے سماج کو اس لعنت سے پاک کرنے کا عہد لیا_

شعبہ اصلاح معاشرہ جمعیت علماء ارریہ کے زیراہتمام مکتب صفہ دینیات جامع مسجد بھنگیہ ارریہ کے زیرانتظام جہیز و نشہ مخالف مہم کا آٹھواں اجلاس عام صدر شعبہ اصلاح معاشرہ جمعیت علماء ارریہ کی سرپرستی اور مفتی علیم الدین صاحب قاسمی شیخ الحدیث و ناظم اعلیٰ دارالعلوم رحمانی منور نگر زیرومائل ارریہ کی صدارت میں منعقد ہوا۔

پروگرام کی نظامت جامع مسجد بھنگیہ کے امام و خطیب اور مکتب صفہ کے معلم مولانا محمد طلحہٰ قاسمی نے بحسن وخوبی انجام دئیے۔

پروگرام کا آغاز قاری محمد ناظم کی تلاوت اور مولوی محمد عرفان کی نعت رسول سے ہوا۔

جہیز ونشہ مخالف مہم کا آٹھواں اجلاس اختتام پذیر

اجلاس سے افتتاحی خطاب کرتے ہوئے جمعیت علماء ارریہ کے نائب صدر مولانا مصور عالم ندوی نے یہ شعر پڑھا:

دل کے پھپھولے جل اٹھے سینے کے داغ سے

اس گھر کو آگ لگ گئی گھر کے چراغ سے

آج جمعیت علماء ارریہ جہیز و نشہ مخالف مہم چلاتے ہوئے آپ کے گاؤں آئی ہے یہ آپ کے لئے خوش نصیبی ہے۔

افسوس کہ ہم نے اپنے ملک کے وطنی لوگوں سے اس رسم بد کو اپنی زندگی کا ایسا حصہ بنالیا کہ ہم سے انسانیت ہی رخصت ہو گئی۔آج ہمارے بچے جب باہر نکلتے ہیں تو شیر و جنگلی جانور سے اتنا خوف نہیں ہوتا جتنا اس بات کا خوف دامن گیر رہتا ہے کہ کہیں باہر میرا بچہ نشہ کا شکار نہ ہوجائے۔فتنہ جہیز پر بولتے ہوئے انہوں نے اللہ کے رسول صلی اللہ علیہ وسلم کی مشہور حدیث پڑھی کہ جو آدمی جس قوم کی شکل وصورت اور طرزِ زندگی اختیار کرے گا اس کا حشر اسی کے ساتھ ہوگا۔

اجلاس کے سرپرست مفتی محمد اطہر القاسمی نے اپنے خطاب میں نشہ کے نقصانات اور اس کے نتیجے میں سرزد ہونےوالی برائیوں کا ذکر کرتے ہوئے اس سے بچنے کا حل بھی پیش کیا۔

مفتی صاحب نے فتنۂ جہیز پر بولتے ہوئے کہاکہ سماج کے نوجوان اگر اسی طرح اپنے ضمیر کا سودا کرتے ہوئے نکاح جیسی عبادت کو تجارت بنانے کا عمل جاری رکھیں گے تو نوجوان بیٹیوں کی خودکشیاں،راہ فرار اور غیروں کے ہاتھوں ایمان بیچ کر ارتداد کی آندھی مسلم معاشرے کے ایک ایک گھر تک پہونچ جائے گی۔اس لئے جس طرح گاؤں کے ایک گھر میں لگی ہوئی آگ بجھانے کے لئے گاؤں کے سارے ماسٹر،ڈاکٹر،پروفیسر،انجینیر،عالم،جاہل اور جوان و بوڑھے مرد وعورت سب ایک ساتھ جمع ہوکر آگ بجھاتے ہیں کہ غفلت کی وجہ سے پورا گاؤں سے کر راکھ ہوسکتا ہے۔اسی طرح اس فتنے کی سرکوبی کے لیے سماج کے ایک ایک فرد کو آگے آنا ہوگا۔

موصوف نے آخر میں تمام شرکاء اجلاس سے عہد لیا کہ ہم سب جمعیت علماء ارریہ کی اس مہم کو گھر گھر پہونچائیں گے،بےجارسم ورواج،لین دین،نقد رقم اور لمبی چوڑی بارات کے ساتھ دیگر تمام تر لوازمات سے عمل نکاح کو پاک کریں گے۔الحمدللہ ہزاروں افراد نے بیک آواز مفتی صاحب کی آواز میں آواز ملاتے ہوئے ایک نئی تاریخ رقم کرنے کا عہد لیا۔

اخیر میں صدر اجلاس مفتی علیم الدین صاحب قاسمی دامت برکاتہم نے شادی بیاہ میں ناجائز لین دین اور مانگ مطالبے کے ساتھ عورتوں کی دینی تعلیم سے بےتوجہی اور باطل طاقتوں کے مقابلے کے لیے لوگوں کو آگے آنے کی اپیل کی۔

انہی کی دعاء پر اجلاس اختتام پذیر ہوا۔

اجلاس کے دیگر شرکاء میں سے مولانا محمد عیاض الرحمن،مولانا فیضان رحمانی،مولانا محی الدین،ماسٹر عبد الرشید،ماسٹر توحید خان،محمد قاسم خان،ابو نصر خان،ناز خان وغیرہ بطور خاص قابل ذکر ہیں۔

روزنامہ نوائے ملت
روزنامہ نوائے ملتhttps://www.nawaemillat.com
روزنامہ ’نوائے ملت‘ اپنے تمام قارئین کو اس بات کی دعوت دیتا ہے کہ وہ خود بھی مختلف مسائل پر اپنی رائے کا کھل کر اظہار کریں اور اس کے لیے ہر تحریر پر تبصرے کی سہولت فراہم کی گئی ہے۔ جو بھی ویب سائٹ پر لکھنے کا متمنی ہو، وہ روزنامہ ’نوائے ملت‘ کا مستقل رکن بن سکتے ہیں اور اپنی نگارشات شامل کرسکتے ہیں۔
کیا آپ اسے بھی پڑھنا پسند کریں گے!

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں

- Advertisment -
- Advertisment -

مقبول خبریں

حالیہ تبصرے