ہفتہ, 8, اکتوبر, 2022
ہوماعلان واشتہاراتنوجوان قیادت سے نوجوانوں کو بڑی امیدیں وابستہ ہیں:خالدانورپورنوی

نوجوان قیادت سے نوجوانوں کو بڑی امیدیں وابستہ ہیں:خالدانورپورنوی

مولاناآفتاب عالم رحمانی،مولانامنہاج الدین قاسمی،خالدانورپورنوی پرمشتمل ایک وفد نے نومنتخب امیرشریعت کو مبارکبادی پیش کی
(پریس ریلیز،مورخہ 14اکتوبر2021)
آپ نوجوان ہیں،آپ کی فکربھی جوان ہے،اللہ نے آپ کو قیادت کی اہم ذمہ داری ہے،اس لئے نوجوانوں کی بڑی امیدیں آپ سے وابستہ ہیں،یہ باتیں خانقاہ رحمانی مونگیرکے سجادہ نشیں،جناب حضرت مولانااحمدولی فیصل رحمانی صاحب کے امارت شرعیہ کے آٹھویں امیرشریعت منتخب کئے جانے پر آج گلدستہ پیش کرتے ہوئے معروف صحافی،اور ترجمان ملت ڈاٹ کام کے بانی وچیف ایڈیٹر مفتی خالدانورپورنوی نے کہیں،واضح رہے کہ آج ایک وفد بشمول جناب جناب ڈاکٹر، مولانا محمدآفتاب عالم صاحب رحمانی وائس پرنسپل مدرسہ اسلامیہ شمس الہدی پٹنہ،جناب مولانامنہاج الدین صاحب قاسمی استاذ جامعہ مدنیہ سبل پور،پٹنہ،معروف صحافی مفتی خالدانورپورنوی جنرل سکریٹری رابطہ مدارس اسلامیہ عربیہ بہار،جناب سیدمحمد فیض بانی وڈائریکٹراقرا گلوبل اسکول،شریف کالونی،پٹنہ،امارت شرعیہ پہونچ کر، جناب حضرت مولاناااحمدولی فیصل رحمانی صاحب کے آٹھویں امیرشریعت منتخب کئے جانے پرگلدستہ پیش کرکے مبارکبادی پیش کی،اور امارت شرعیہ کے استحکام کے سلسلہ میں مختصر بات،چیت بھی کی،اس موقع پر اس وفد میں موجودجناب مولانامحمدآفتاب عالم صاحب رحمانی،مولانامنہاج الدین صاحب قاسمی، خالد انورپورنوی ،سیدمحمدفیض نے سب سے پہلے امارت شرعیہ کے نائب امیرشریعت جناب حضرت مولانا محمد شمشاد صاحب رحمانی،قاسمی،قائم مقام ناظم جناب مولاناشبلی صاحب قاسمی سے تفصیلی ملاقات کی،نائب امیرشریعت کو بھی مبارکبادی پیش کی،اور امارت کے تئیں ان کی فکرمندی کااقرارکرتے ہوئے کئی اہم اور مفیدمشورے بھی دئیے،ملک کے حوالہ سے بھی اہم باتیں کیں،اس کے بعد نومنتخب امیرشریعت کو گلدستہ پیش کرکے اس وفد نے مبارکبادی پیش کی،اور نیک خواہشات کا اظہارکیا،ملاقات کے بعد اپنے پریس اعلانیہ کے ذریعہ جناب مولاناآفتاب عالم صاحب رحمانی نے کہا:امارت شرعیہ کو جس ہمہ جہت شخصیت کی ضرورت تھی،اللہ نے ولی بن ولی کی شکل میں امارت کو عنایت فرمادیا،انہوں نے کہا:قیادت انہیں ورثہ میں ملی ہے،اس خانوادہ کی بڑی خدمات ہیں ،اس ملک اور ملت کے لئے،اس لئے ہمیں یقین کامل ہے کہ اللہ نومنتخب امیرشریعت سے ہمہ جہت کام لے گا،اس وفدمیں موجودجناب مولانامنہاج الدین صاحب قاسمی نومنتخب امیرشریعت کے اخلاق سے بیحدمتاثرہوئے،انہوں نے کہا:جیساحضرت کے بارے میں سناتھا،اس سے بہترپایا،انہوں نے کہا:کام کے لئے جس نوجوان کی امارت کو ضرورت تھی،وہ ہمیں مل گیا،اب ہماری ذمہ داری ہے کہ ہم ان کاتعاون کریں،انہوں نے کہا:اس وقت سب سے زیادہ تعلیمی شرح کو بڑھانے کی ضرورت ہے، اور نومنتخب امیرشریعت حضرت مولانااحمدولی فیصل رحمانی صاحب علمی اور تعلیمی میدان کے آدمی ہیں،یقیناان کی آمدسے انقلاب آئے گا،اس وفد میں موجود مفتی خالدانورپورنوی نے بھی نومنتخب امیرشریعت کو مبارکبادی پیش کی،انہوں نے کہا:ارباب حل وعقد نے کثرت آراء سے ولی بن ولی کومنتخب کیا ہے،اللہ ضرور اس میں خیرڈالے گا،اور وہ ملت اسلامیہ کے مفیدترثابت ہوں گے،انہوں نے کہا:ابھی یہ چونکہ جوان ہیں،اور اس خانوادہ سے انہیں قیادت ورثہ میں ملی ہے،جس نے امارت شرعیہ کو بام عروج تک پہونچانے میں اہم کردار پیش کیاتھا،ہمیں امیدہے کہ یہ بھی اپنے داداحضرت مولانا محمدمنت اللہ صاحب رحمانیؒ،اور اپنے والدحضرت مولاناسیدمحمدولی رحمانی صاحب ؒ کے نقش قدم پر چل کر امارت کو عروج بخشیں گے،انہوں نے کہا:ہماری دعاء ہے کہ اللہ انہیں قوت فیصلہ،اصابت رائےکے ساتھ،امارت کے لئے بہترین خیرخواہ،ملت اسلامیہ کے لئےایک قائد ورہنما،اور ظلم وجور، مصائب وآلام کی چکی میں پس رہی انسانیت کے لئے ایک مسیحااور غم وخوار بنائے،عصری ودینی تعلیم کے حسین امتزاج کے ذریعہ ایسے اداروں کے قیام کو اپنی زندگی کا مشن بنائیں،جہاں ایک غریب باپ کا غریب بیٹابھی بڑاآفیسربننے کاخواب دیکھ سکے،لیکن اس کے لئے یہ بھی ضروری ہے ہم سبھوں کا تعاون ان کے ساتھ شامل رہے۔خالدانورپورنوی نے حضرت نائب امیرشریعت کو مبارکبادی پیش کی ،اس لئے کہ گذشتہ کئی مہینوں سے جاری اختلافات،اور طرح ،طرح کے مسائل،اوردشواریوں کے بیچ ،جس دوراندیشی ، بصیرت ، اور جامع حکمتِ علمی سے امارت شرعیہ کو منتشر ہونے انہوں نے بچایا،اس کے لئے وہ یقینامبارکبادکے مستحق ہیں، اللہ انہیں جزائے خیردے،ان کی حفاظت فرمائے ،اور ملک وملت کے لئے زیادہ سے زیاد اللہ ان سے کام لے۔آمین،اس موقع پر خالدانورپورنوی نےجشن صدسالہ مدرسہ اسلامیہ شمس الہدی،پٹنہ ،ایک تاریخی دستاویز کے نام سے لکھی گئی اپنی کتاب بھی حضرت امیرشریعت اور نائب امیرشریعت کو پیش کیا،جس پر انہوں نے خوشی کااظہارکیا،اور فرمایا:اس وقت اس کی ہمیں ضرورت بھی تھی،اور انہوں نے بڑی دعاؤں سے نوازا،اللہ قبول فرمائے ،آمین

روزنامہ نوائے ملت
روزنامہ نوائے ملتhttps://www.nawaemillat.com
روزنامہ ’نوائے ملت‘ اپنے تمام قارئین کو اس بات کی دعوت دیتا ہے کہ وہ خود بھی مختلف مسائل پر اپنی رائے کا کھل کر اظہار کریں اور اس کے لیے ہر تحریر پر تبصرے کی سہولت فراہم کی گئی ہے۔ جو بھی ویب سائٹ پر لکھنے کا متمنی ہو، وہ روزنامہ ’نوائے ملت‘ کا مستقل رکن بن سکتے ہیں اور اپنی نگارشات شامل کرسکتے ہیں۔
کیا آپ اسے بھی پڑھنا پسند کریں گے!

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں

- Advertisment -
- Advertisment -

مقبول خبریں

حالیہ تبصرے