نوجوان عالم دین مولانا شمشاد رحمانی امارت شرعیہ کے نائب امیرشریعت نامزد

77

پٹنہ۔۳۰؍مارچ: (نمائندہ خصوصی) ہندوستانی مسلمانوں کی موقر تنظیم امارت شرعیہ بہار، اڈیشہ وجھارکھنڈ کے امیر شریعت مولانا سید محمد ولی رحمانی نے اپنے خصوصی اختیارات کا استعمال کرتے ہوئے صالح نوجوان عالم دین مولانا شمشاد رحمانی کو نائب امیر شریعت مقرر کیا ہے۔ مولانا محترم فی الحال دارالعلوم وقف دیوبند کے مقبول استاذ ہیں اور اب انہیں اکابرین امارت شرعیہ بہار اڈیشہ وجھارکھنڈ نے یہ نئی ذمہ داری دی ہے۔ امید ہے کہ اللہ تعالیٰ ان سے امارت کے تئیں بہتر کام لیں گے ۔ واضح رہے کہ نائب امیر شریعت کا انتخاب نہیں کیاجاتا ہے یہ امیر شریعت کی صوابدید پر موقوف ہوتا ہے اور ان کا استحقاق ہوتا ہے۔ جس طرح سابق امرائے شریعت، نائب امیر شریعت نامزد کرتے رہے ہیں۔امیرشریعت مولانا محمدولی رحمانی ان دنوں زیرعلاج ہیں،اس سے قبل اپنے اختیارات کا استعمال کرتے ہوئے انہوں نے دواہم فیصلے کیے، امارت کے سنیئر قاضی، قاضی انظار قاسمی کو قاضی شریعت اور مولانا شمشاد رحمانی کو نائب امیرشریعت نامزد کیا۔نوجوان اور باصلاحیت عالم دین کو اس نئی ذمہ داری دئیے جانے سے نوجوان طبقے میں خوشی کا ماحول ہے۔ وہ لوگ جو اعتراض کررہے تھے کہ معمر قیادت نوجوانوں کو آگے نہیں بڑھاتی ہے ، مولانا کا انتخاب ان کو عملی جواب بھی ہے۔ مولانا محترم کے انتخاب کی ستائش چوطرفہ کی جارہی ہے اور امیرشریعت کی صحت کے لیے مخلصین دعاء گو ہیں۔