مولانا کلب صادق اتحاد بین المسلمین کے علمبردار تھے محمد حسان ندوی

31

مولانا کلب صادق اتحاد بین المسلمین کے علمبردار تھے :
محمد حسان ندوی
دھن گھٹا ( سنت کبیر نگر) 25 نومبر
دنیا میں سیکڑوں لوگ مرتے اور جیتے ہیں لیکن کچھ لوگ وہ ہوتے ہیں جن کی ذات اور ان کا جینا مرنا سب دین وملت کے وقف رہتا ہے،انہیں میں ایک اہم شخصیت مولانا کلب صادق بھی تھے،جنہوں نے ہندی مسلمانوں کو ایک کڑی میں پرونے کی انتھک محنت اور کوشش کی اور ان کی کوششیں تعلیم کے میدان میں بھی نمایاں ہیں،مولانا لکھنؤ شہر کے علمی اور دینی خانوادے میں پیدا ہوئے اور دینی ماحول میں تربیت پائی،ان کا خاندان شیعوں کے لئے مرجع کا حیثیت رکھتا ہے،مولانا اتحاد ملت کے علمبردار تھے،مذکورہ خیالات کا اظہار محمد حسان ندوی خطیب امام جامع مسجد مہولی سنت کبیر نگر کیا انہوں نے کہا کہ مولانا کی ملی خدمت ناقابل فراموش ہیں،
مفتی محبوب احمد قاسمی نے کہا کہ اتحاد امت اور ہندوستانی مسلمانوں کا مشترکہ اور متحدہ پلیٹ فارم آل انڈیا مسلم پرسنل لاء بورڈ کے نائب صدر رہے،ان کی آراء ٹھوس اور مضبوط ہوتی تھی اور ان کے فیصلے صواب دید پر مبنی ہوتے تھے،مولانا کا بیشتر وعظ اتحاد امت کو فروغ دینا اور ٹولیوں میں بٹے ہوئے مسلمانوں کو ایک پلیٹ فارم پر لانا ہے،مولانا نے تعلیمی شعبہ میں قابل قدر خدمات انجام دیں اور علمی حلقوں میں اچھی خاصی پذیرائی حاصل کی ،