قرآن کریم کی عظمت کا تقاضہ ہے کہ اس کے احکامات پر عمل ہو۔ 

121

قرآن کریم کی عظمت کا تقاضہ ہے کہ اس کے احکامات پر عمل ہو۔

فیض العلوم خانقاہ بوڑیہ میں سالانہ امتحان واجلاس کا انعقاد بحسن وخوبی اختتام پذیر

(پیرجی حافظ حسین احمد)

(پریس ریلیز)

قرآن مجید اللہ کی عظیم کتاب ہے جس کی عظمت ہم سب کے دلوں میں موجود ہے اس کا ادب واحترام کیا جارہا ہےاسے پڑھا پڑھا یا جارہاہے اور اس کے خلاف ایک حرف بھی سننے کے روادار نہی ہیں یہ خوش آیندبات ہے لیکن اس کے احکامات پر عمل میں کوتاہی ہونا یہ سمجھ سے بالاتر بات ہے یہ خطاب فیض العلوم خانقاہ بوڑیہ کے سالانہ اجلاس کے صدارتی خطاب میں رئیس محترم، رہبر ملت حضرت الحاج پیرجی حافظ حسین احمد قادری مجددی حفظہ اللہ نے کیا،

حضرت صدرمحترم نے مزید کہا کہ قرآن کریم کی تعلیمات دنیا وآخرت کی کامیابی کی ضامن ہیں خوش نصیب ہیں وہ بچے اور بچیاں جو اپنے والدین کی توجہ سے قرآن کریم کی تعلیمات حاصل کرکے قوم وملت کی خدمت کرتے ہیں آج کے پرآشوب ماحول میں ہم سب کی دوہری ذمہ داری ہے کہ صحیح طریقہ پر آفاقی کتاب قرآن مقدس کی تعلیمات کو عام کیا جائے اور اس کے فروغ کے جو ذرائع ہیں مدارس ومکاتب اور جامعات کی خدمات کو سراہتے ہوئے ان کا بھرپور خیال رکھا جائے جس کے نتیجہ میں قرآن پاک کے خلاف ہرزہ سرائی کرنے والوں کو موقعہ نہی ملے گا اور وہ بدزبانی اور بدکلامی نہی کرسکیں گے،

حضرت پیر صاحب نے خطاب رکھتے ہوئے بہت زور دیکرکہا حالات کا مقابلہ صبروشکرکے ساتھ کیاجائے کیونکہ صبرکرنے سے اللہ کی مدد شامل حال ہوگی اور شکرپر نعمتوں میں اضافہ ہوگا حضرت نے سالانہ امتحانات میں کامیاب ہونے والے اور مختلف درجات (حفظ وناظرہ، دینیات،عربی کلاسس)سے فارغ ہونےوالے بچوں،بچیوں، ان کے اساتذہ، والدین اور معاونین کو مبارکباد پیش کی۔

اس اجلاس کا آغاز قاری محمد عمار اور محمد ارمان کی نعت حبیب ﷺ سے ہوا اور نظامت کے فرائض مفتی عبدالقیوم قاسمی صاحب نے انجام دئیے اس اجلاس کا انعقاد محکمۂ صحت کی گائیڈ لائن کو ملحوظ رکھتے ہوئے کیا گیا جس میں موجود طلباء، اسٹاف ادارہ اور واردین وصادرین نے شرکت کی جبکہ مفتی محمد ناصر ایوب ندوی اور بہت سے احباب نے آن لائن شرکت کی۔اس پروگرام کو کامیاب بنانے میں مولانا محمد عارف قاسمی، مولانا محمد ہارون مظاہری، قاری محمد طیب کریمی، مولانا عبدالستار قاسمی، مولانا محمد ذوالفان مظاہری،

قاری عبدالستار کریمی، قاری محمد محسن کریمی، قاری محمد ابراہیم کریمی، قاری محمد عمارعارفی، قاری عبدالرحمن بوڑیاوی نے اہم رول ادا کیا۔

آخر میں صدرمحترم کی نے پوری دنیا میں امن و امان خصوصاً کرونا اورتمام بیماریوں کے خاتمہ کے لئے دعاء کرائی۔