ہومزبان وادبغیر منقوط کلام

غیر منقوط کلام

غیر منقوط کلام

نتیجۂ فکر:محمد احتشام اختر ندوی

ملے مولا سے ہم سدا لمحہ لمحہ

صلہ اس کا ہم کو ملا لمحہ لمحہ

ملا ہم کو ماہ رسول مکرم

الہی کا احساں ہوا لمحہ لمحہ

ہے مولائے رحماں کے در کا وہ عالم

ہراک کے لئے ہے کھلا لمحہ لمحہ

درمولا آکر رکھا مدعا کو

مداوا وہ مولا ہوا لمحہ لمحہ

وہ درد والم کا ہے درماں ہمارے

ہوا وہ ہماری دوا لمحہ لمحہ

 الہی کا رحم و کرم لا مکاں ہے

مرے ہمدموں کو دکھا لمحہ لمحہ

ہر اک دل کو حاصل سکوں ہے اسی سے

سکوں اس سے ہم کو ملا لمحہ لمحہ

وہ مولائےکل ہے ہمارا معلم

ملا اس سے درس ہدیٰ لمحہ لمحہ

ادھر سے ادھر کو ہوا سارا عالم

مگر مولا حامی رہا لمحہ لمحہ

لکھوں حمد مولا کروں مدح احمد

لگوں اس عمل سےسدا لمحہ لمحہ

کیا آپ اسے بھی پڑھنا پسند کریں گے!

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

- Advertisment -
- Advertisment -
- Advertisment -

مقبول خبریں

حالیہ تبصرے