عمر خالد کو جیل میں مناسب سکیورٹی فراہم کرنے کا حکم!

84

عمر خالد کو جیل میں مناسب سکیورٹی فراہم کرنے کا حکم!
دہلی کی کڑکڑڈوما کورٹ نے دہلی فسادات معاملے میں گرفتار کیے گئے سابق جے این یو رہنما عمر خالد کی عرضی پر سماعت کرتے ہوئے انہیں جیل میں مناسب سکیورٹی فراہم کرنے کا حکم دیا ہے۔
دہلی ۔ 20 اکتوبر 2020
ایڈیشنل سیشن جج امیتابھ راوت نے جیل سپرنٹنڈنٹ کو حکم دیا ہے کہ عمر خالد کو قانون کے مطابق مناسب سکیورٹی فراہم کرنے کا انتظام کریں ۔

دراصل سابق جواہر لعل نہرو (جے این یو) رہنما عمر خالد نے ایک عرضی دائر کرکے جیل میں مناسب سکیورٹی فراہم کرنے کا مطالبہ کیا تھا۔جس سے اسے کوئی نقصان نہ پہنچا سکے۔

کورٹ نے کہا کہ عمر خالد عدالتی تحویل میں ہے۔اس لیے جیل قوانین کے مطابق ان کی حفاظت کی جانی چاہیے۔

کورٹ نے تہاڑ جیل انتطامیہ کو حکم دیا ہے کہ بلا امتیاز عمر خالد کو مناسب سکیورٹی فراہم کی جائے۔

عمر خالد کو یو اے پی اے کے تحت گرفتار کیا گیا ہے، عمر خالد کو دہلی پولیس کی کرائم برانچ نے یکم اکتوبر کو ایک دوسرے معاملے میں گرفتار کیا تھا اور تین دنوں کی پولیس ریمانڈ حاصل کی تھی، یو اے پی اے کے معاملے میں خالد کو 22 اکتوبر تک عدالتی تحویل میں بھیجا گیا ہے۔