عزت مآب وزیر _اعلیٰ حکومتِ بہار،نورالاہی قاسمی

43

ارریہ(توصیف عالم مصوریہ)
#موضوع، ریاستِ بہار کے سکنڈری و ہائیرسکنڈری اسکولوں میں اردو کی مادری زبان کےطور پر پڑھانے اور ہندی و انگریزی کیطرح مادری زبان (اردو) کیلئے بھی ایک ٹیچر بحال کرنے کے سلسلے میں،

#جناب_عالی،، اردو ریاستِ بہار کی دوسری سرکاری زبان ہے آپ اس کی ترقی کیلئے پابندِ عہد اور کوشاں رہے ہیں. مگر محکمہ تعلیم کے ذریعہ اسکے ساتھ سوتیلہ سلوک کیا جارہا ہے،ریاستِ بہار کے سکنڈری و ہائیرسکنڈری اسکولوں میں اب تک اردو کی تدریس بحیثیت مادری زبان کے طور پر ہوتی تھی، _مگر حال ہی میں محکمہ تعلیم کے نوٹیفکیشن نمبر 799 مورخہ 15 جون 2020 کے ضابطے میں تبدیلی کرتے ہوئے اردو کو مادری زبان کے بجائے دوسری زبان کے زمرے میں رکھ دیا گیا ہے، جو آپ کی حکومت میں افسوس ناک ہے محکمہ تعلیم کے اس اقدام سے اہلِ اردو داں طبقے میں بے چینی اور انتہائی ناراضگی ہے،

#لہذا، آپ سے گزارش ہے کہ ریاست کے ہائ اسکولوں میں اردو کی تدریس بطور مادری زبان کرنے اور ہندی و انگریزی کیطرح مادری زبان #اردو_کیلئے بھی ایک عہدہ دینے کیلئے محکمہ تعلیم کو ہدایت دی جائے تاکہ اردو داں طلباء و طالبات کو مادری زبان کی تدریس کا بھرپور فائدہ اٹھاتے نے کا موقع ملے؛؛
ملہریہ پوسٹ باغ نگر ارریہ (بہار)