بدھ, 5, اکتوبر, 2022
ہوماعلان واشتہاراتصبر وتحمل سے کام لیں دعاۃ ومبلغین

صبر وتحمل سے کام لیں دعاۃ ومبلغین

امارت شرعیہ کے مبلغین وعمال سے حضرت نائب امیر شریعت کا خطاب

پھلواری شریف

امارت شرعیہ بہاراڈیشہ وجھارکھنڈ کے دعاة ومبلغین کے تربیتی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے نائب امیر شریعت حضرت مولانا محمد شمشاد رحمانی قاسمی مدظلہ نے فرمایاکہ دعوت وتبلیغ کی راہ میں بہت سی مشکلات اوررکاوٹیں پیدا ہوں گی،ہماری داعیانہ ذمہ داری ہے کہ ہم انہیں صبر واستقلال اور عزم واستقامت کے ساتھ برداشت کریں،انبیاءاکرام کی یہی سنت رہی ہے،حضرت لقمان علیہ السلام نے اپنے بیٹوں کو مصائب پر صبر کرنے کی تلقین کی اورخود جناب محمد الرسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے دعوت کے میدان میں بہت سی تکلیفیں برداشت کیں اورامت کے لئے نمونہ چھوڑ گئے کہ مشکلات راہ کو برداشت کرنے سے ہی کامیابی ملتی ہے،واضح ہوکہ امارت شرعیہ کے شعبہء دعوت وتبلیغ کے زیر اہتمام مورخہ28اگست 2021ءکویک روزہ تربیتی اجتماع مرکزی دفتر امارت شرعیہ کے کانفر نس ہال میں منعقد ہوا، جس کی صدارت حضرت نائب امیر شریعت مدظلہ نے فرمائی جب کہ اس شعبہ کے نگراں اورامارت شرعیہ کے نائب ناظم مولانا مفتی محمد سہراب ندوی صاحب نے اجلاس کی نظامت کی،اس موقع پر حضرت نائب امیر شریعت نے مزید فرمایاکہ بہاراڈیشہ وجھارکھنڈ میں تقریباً ڈھائی کروڑ مسلمانوں کی آبادی ہے ،اگر ہم سب لوگ پوری آبادی میں محنت کریں تو ایک بڑا حلقہ امارت شرعیہ کی تنظیم سے وابستہ ہوجائے گا،انہوں نے فرمایاکہ امارت شرعیہ کے بزرگوں نے اس شعبہ کو ترقی کے بام عروج تک پہونچانے کے لئے بہت سے خواب دیکھے تھے ،جو کچھ پورے ہوئے اورکچھ ادھورے، ہم سب ان کے خوابوں کو شرمندہ تعبیر کردیں ،تاکہ ان کی روحوں کو تسکین پہونچ سکے،اس لئے دعوة وتبلیغ کی تحریک کو منظم کرنے کے لئے ہم سب فکرمندی اوردلجمعی کے ساتھ میدان عمل میں آئیں اوراس کے لئے افراد کار کوبھی بڑھائی جائیں۔امارت شرعیہ کے قائم مقام ناظم مولانا محمد شبلی القاسمی صاحب نے کہاکہ حالات جس قدر بھی ناگفتہ ہوں ہم سب کو ہمت وحوصلہ کے ساتھ کام کو آگے بڑھانا ہے اورسمع وطاعت کے جذبہ کے ساتھ اس خدمت کو انجام دینا ہے،سمع وطاعت کا جذبہ جس قدر مضبوط ومستحکم ہوگا ادارہ مضبوط ہوگااوریہی ہماری کامیابی کا راز ہے،الحمد للہ اس وقت ہم سب لوگ حضرت نائب امیر شریعت کی قیادت ورہنمائی میں نظم وضبط کے ساتھ کام کو آگے بڑھاتے رہے، انہوں نے کہاکہ ہرداعی کے لئے ضروری ہے کہ امت کے درد کو اپنا درد سمجھے ، اللہ اس کے ذریعہ ان کے مسائل کے ساتھ ہمارے مسئلہ کو حل فرمادیں گے،اس وقت ملک کے طول وعرض میں مسلم لڑکیوں کے اندر ارتداد کی لہرچلی ہوئی ہے،ہم سب کی ذمہ داری ہے کہ داعیانہ کردار ادا کریں اورامت کی صحیح رہنمائی کرتے ہوئے ان کے دلوں میں ایمان ویقین میں پختگی پیدا کرنے کی کوشش کریں،انہوں نے کہاکہ حضرت امیر شریعت سابع مفکراسلام مولانامحمد ولی رحمانی علیہ الرحمہ نے اس شعبہ پر خصوصی توجہ دی تھی۔قاضی شریعت مولانامحمد انظارعالم قاسمی صاحب نے کہاکہ شعبہ تبلیغ کے ذریعہ امارت کے دوسرے شعبوں کو طاقت وتوانائی ملتی ہے،اس لئے یہ شعبہ جس قدر مضبوط ومستحکم ہوگا ادارہ ترقی کرے گا، انہوں نے سمع وطاعت کے جذبہ سے خدمت کرنے کی تلقین کی اورکہاکہ داعی کا اجر اللہ کے یہاں بڑھا ہوا ہے۔امارت شرعیہ کے نائب ناظم مولانامفتی محمد ثناءالہدی قاسمی صاحب نے فرمایاکہ نظام امارت کی انفرادیت یہ ہے کہ پہلے افراد سازی کی جائے پھر جماعت تشکیل دی جائے،ابتداءسے اکابر امارت کے بنائے ہوئے نقوش وخطوط پر اسی نہج سے کام ہوتاآرہاہے،اس کا یہ بھی امتیاز ہے کہ ایسانظام قائم کیاجائے جو سماجی اعتبار سے تعلیم وتہذیب اورملکی وملی مسائل کے حل کے لئے اپنے دائرہ میں رہتے ہوئے اقدامات کرے،اس لئے ہم انسانیت کی بنیاد پر بھی کام کرتے ہیں اوراسی خدمت خلق کے جذبہ سے بڑے امور انجام پارہے ہیں۔امارت شرعیہ کے صدر مفتی مولانا مفتی سہیل احمد قاسمی صاحب نے فرمایاکہ دعاة ومبلغین اسلام کا چہرہ ہوا کرتے ہیں،لوگ داعی اورمبلغ کے کردار وعمل کو دیکھتے ہیں اور پھر رائے قائم کرتے ہیں،اس لئے ہرداعی کے لئے ضروری ہے وہ صاف وستھرا شبیہ وکردار کا حامل ہو،انہوں نے فرمایاکہ آپ کی نسبت عظیم ہے،اس نسبت کی عظمت کو برقرار رکھیں اور جہاں بھی خطاب کا موقع ملے کتاب وسنت کی روشنی میں مو ¿ثر گفتگو کریں۔مولانا مفتی محمد سعیدالرحمن قاسمی صاحب نے کہاکہ امارت شرعیہ تمام مکاتب فکر کا متحدہ ادارہ ہے،اسی اتحاد کا نتیجہ ہے کہ دارالقضاء ،دارالافتاءاوردوسرے شعبہ جات میں مختلف مسالک کے لوگوں کے سوالات آتے ہیں جو اس بات کی طرف اشارہ کرتاہے کہ ہرشعبہ کے ذریعہ اسلام کے دعوت اجتماعیت کا پیغام ملتاہے اوراسلام کے نظام عبادت کی روح بھی اتحاد اجتماعیت پر ہے،جس کو انہوں نے مثالوں سے سمجھایا۔مولانا سہیل احمدندوی نائب ناظم امارت شرعیہ نے کہاکہ داعی کو داعیانہ اوصاف کے ساتھ زندگی گذارنی چاہئے ،ان کے اندر اخلاص وللہیت ،صبر وتحمل ،استغناءوبے نیازی،خوش مزاجی ونرم خوئی اورمجمع شناسی کی کیفیت پیدا ہونی چاہئے،جب تک اخلاص وللہیت کا یہ عمل ہمارے اندر پیدا نہیں ہوگا ،بڑے سے بڑا عمل بھی بے سود ہوجائے گا۔مولانامفتی وصی احمد قاسمی صاحب نائب قاضی شریعت امارت شرعیہ نے کہاکہ دعاة کی حیثیت آکسیجن اورروح کی ہے،اس لئے آپ اپنی ذات کو صاف وشفاف رکھیں ،کیوں کہ کوئی ذات پر اعتبار کئے بغیر بات پر اعتبار نہیں کرے گا۔مولانا سہیل اختر قاسمی صاحب نائب قاضی شریعت امارت شرعیہ نے کہاکہ امارت کی نسبت ایک عظیم نسبت ہے،اس نسبت کا ہم لوگ خیال رکھیں اور وفاداری کے ساتھ اس کو انجام دیں۔مولانا احمد حسین ق
اسمی مدنی معاون ناظم امارت شرعیہ نے کہاکہ دنیا میں ترقیاں علم اورتربیت کے ذریعہ حاصل ہوتی ہیں،تعلیم کے ساتھ اگر تربیت نہ ہوتواس کورس کو نامکمل سمجھا جاتاہے،یہ تربیتی اجلاس ہے،ہم لوگ یہاں کچھ سیکھنے کے لئے آئے ہیں، جب تک ہم اورآپ متحرک نہیں ہوں گے اس وقت تک امارت شرعیہ کی توسیع واستحکام نہیں ہوسکتا،مولانا قمرانیس قاسمی صاحب معاون ناظم امارت شرعیہ نے کہاکہ ہم سب کو ہمت وحوصلہ کے ساتھ کام کرنا چاہئے،داعی کو دینے والا بننا چاہئے ،اگر ہم دینے والے بن جائیں گے تواللہ بھی ان کے قلوب کو ہماری طرف متوجہ فرمادیں گے۔انہوں نے کہاکہ ماضی میں شعبہ تبلیغ کے ذریعہ بڑے بڑے امور انجام پائے اوراس وقت بھی بہت سے امور انجام پارہے ہیں،مزید ہمیں پورے عزم وحوصلہ سے کام کرنا چاہئے۔اس موقع پر جناب مولانا محمد مزمل صاحب،جناب مولانا عبداللہ عبادہ اورمولانامحمد شعیب قاسمی صاحب مبلغین امارت شرعیہ نے مبلغین کی طرف سے ترجمانی کرتے ہوئے کہاکہ اس وقت ہمارے بزرگوں نے جن ہدایات پر عمل کرنے کی ترغیب دی ہے ان شاءاللہ حق المقدوراس پر عمل کرنے کی کوشش کروں گا،ان حضرات نے یہ بھی یقین دہانی کرائی کہ ہم لوگ سمع وطاعت کے جذبہ سے دعوت کے کام کو انجام دیتے ہیں اورانشاءاللہ آئندہ بھی انجام دیتے رہیں گے۔مولانامفتی محمد سہراب ندوی صاحب نائب ناظم امارت شرعیہ وکنوینر اجلاس نے اخیر میں کلمات تشکر بیان کرتے ہوئے کہاکہ ہم سب لوگ اپنے فرائض کو انجام دیتے رہیں ،ادارہ ہماری ضرورتوں اورحقوق کی ادائیگی کی رعایت وکفالت کرتارہے گا۔مولانا شاہ نواز عالم مظاہری،مولانا ممتاز احمد ،مولانا صابرحسین قاسمی نے اجلاس کو کامیاب بنانے میں بڑی جدوجہد کی۔اجلاس کا آغاز مولانا مطیع اللہ کی تلاوت کلام پاک سے ہوا ، مفتی اکبرعلی قاسمی ،مولانا فیاض احمد اور مولانا فیروز صاحب نے بارگاہ رسالت میں نذرانہ عقیدت پیش کیا اوراخیر میں حضرت نائب امیر شریعت مدظلہ کی رقت انگیز دعاپر یہ اجلاس اختتام پذیر ہوا۔

روزنامہ نوائے ملت
روزنامہ نوائے ملتhttps://www.nawaemillat.com
روزنامہ ’نوائے ملت‘ اپنے تمام قارئین کو اس بات کی دعوت دیتا ہے کہ وہ خود بھی مختلف مسائل پر اپنی رائے کا کھل کر اظہار کریں اور اس کے لیے ہر تحریر پر تبصرے کی سہولت فراہم کی گئی ہے۔ جو بھی ویب سائٹ پر لکھنے کا متمنی ہو، وہ روزنامہ ’نوائے ملت‘ کا مستقل رکن بن سکتے ہیں اور اپنی نگارشات شامل کرسکتے ہیں۔
کیا آپ اسے بھی پڑھنا پسند کریں گے!

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں

- Advertisment -spot_img
- Advertisment -
- Advertisment -

مقبول خبریں

حالیہ تبصرے