جمعرات, 29, ستمبر, 2022
ہوماعلان واشتہاراتشاہ ولی اللہ انسٹی ٹیوٹ کمپیوٹر سینٹر ساٹھی ،چمپارن میں تقریب تقسیم...

شاہ ولی اللہ انسٹی ٹیوٹ کمپیوٹر سینٹر ساٹھی ،چمپارن میں تقریب تقسیم اسناد

فلسفہ قدیم اور فلاسفہ یونان کے نظریات اسلامی احکام و عقایدسے بعض وقت متصادم ہوسکتے ہیں لیکن جدید سائنسی تحقیقات و حقائق اسلام مخالف نہیں بلکہ قرآنی احکام کے عین موئید و مصدق ہیں
۱۲ دسمبر ۲۰۲۱ساٹھی مغربی چمپارن مفتی عطاء الرحمن قاسمی
فلسفہ قدیم اور فلاسفہ یونان کے نظریات اسلامی احکام و عقایدسے بعض وقت متصادم ہوسکتے ہیں لیکن جدید سائنسی تحقیقات و حقائق اسلام مخالف نہیں بلکہ قرآنی احکام کے عین موئید و مصدق ہیں ،موجودہ دور میں کمپیوٹر انسان کی زندگی کا ایک لازمی حصہ ہو گیا ہے،جس کی ضرورت زندگی کی ہر شعبہ میں محسوس کی جاتی ہے ،جو کمپیوٹر کی تعلیم و تمرین سے محروم ہے، اس کی زندگی موجودہ زمانہ میں ایک مفلوج الاعضا ء اور اپاہچ کی زندگی ہو کر رہ گئی ہے ،ان خیالات کا اظہار مولانا مفتی عطاء الرحمن قاسمی چیئر مین شاہ ولی اللہ انسٹی ٹیوٹ نئی دہلی نے شاہ ولی اللہ انسٹی ٹیوٹ کمپیوٹرسینٹر ،ساٹھی ،مغربی چمپارن بہار کے ایک سالہ ڈپلومہ ان کمپیوٹر اپلیکیشن ،بزنس اکائونٹینٹ اینڈ ملٹینگل ڈی ٹی پی اور ڈپلوما ان اردو لنگویجز کی تقسیم اسناد کے موقع پر کیا جو قومی کونسل برائے فروغ اردو زبان کے تعاون سے چلتا ہے ،اس تقریب میں علی گڑھ مسلم یونیورسٹی سے آئے ہوئے ،شعبہ اردو کے استادڈاکٹر سلطان احمد نے طلبہ و طلبات کی حوصلہ افزائی کرتے ہوئے کہا کہ یہ کمپیوٹر سینٹر منسٹری ایچ آرڈی ، منسٹری آف الکٹرونکس اینڈ انفرمیشن ٹیکنالوجی اور منسٹری آف سکیل ڈیولپمنٹ اینڈ انٹرپریونشپ حکومت ہند سے منظور ہے ، جو طلبہ و طلبات کے لیے کمپیوٹر سیکھنے کا ایک سنہری موقع فراہم کرتا ہے ، نبی عالم صاحب نے ساٹھی مغربی چمپارن میں اس شاہ ولی اللہ انسٹی ٹیوٹ کمپیوٹر سینٹر کے قیام پر خوشی کا اظہار کیا اور اسکول و کالج اور مدارس و جامعات کے طلبہ و طلبات کو بھاری تعداد میں کمپیوٹر سیکھنے اور محنت و لگن سے پڑھنے کا مشورہ دیا ۔

روزنامہ نوائے ملت
روزنامہ نوائے ملتhttps://www.nawaemillat.com
روزنامہ ’نوائے ملت‘ اپنے تمام قارئین کو اس بات کی دعوت دیتا ہے کہ وہ خود بھی مختلف مسائل پر اپنی رائے کا کھل کر اظہار کریں اور اس کے لیے ہر تحریر پر تبصرے کی سہولت فراہم کی گئی ہے۔ جو بھی ویب سائٹ پر لکھنے کا متمنی ہو، وہ روزنامہ ’نوائے ملت‘ کا مستقل رکن بن سکتے ہیں اور اپنی نگارشات شامل کرسکتے ہیں۔
کیا آپ اسے بھی پڑھنا پسند کریں گے!

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں

- Advertisment -spot_img
- Advertisment -
- Advertisment -

مقبول خبریں

حالیہ تبصرے