دھن گھٹا روڈ ویز بس بولیرو میں آمنے سامنے کی زبردست ٹکر ایک کی موت 9 افراد زخمی 3 کی حالت نازک

55

دھن گھٹا سنت کبیر نگر 22 دسمبر رپورٹ عقیل احمد خان

تھانہ دھن گھٹا حلقہ واقع موضع پرساد پور، رام جانکی سڑک پر آج صبح قریب سات بجے مسافروں سے بھری روڈ ویز بس اور بولیرو کی آمنے سامنے کی ہوئی زبردست ٹکر میں ایک طرف جہاں ایک شخص کی موقع پر دردناک موت واقع ہوگئی ہے وہی بس اور بولیرو میں سوار 9 افراد زخمی ہو گئے ہیں جس میں تین کی حالت نازک بتائی جاتی ہے زخمی مسافروں کو دھن گھٹا پولیس نے علاج کے لئے ابتدائی صحت مرکز ملولی میں بھرتی کرایا مسافروں کی حالت نازک دیکھتے ہوئے ملولی کے ڈاکٹروں نے گورکھپور میڈکل کالج کے لیے ریفر کردیا ہے ،

خبروں کے مطابق مقامی تھانہ حلقہ واقع موضع ہنڈیا معافی ضیاالحق ولد سرتاج عمر 35 سال گزشتہ 10 برس سے روزی روٹی کے لئے کویت میں مقیم تھے دوماہ قبل اپنے آبائی وطن ہنڈیا معافی آنے سے پہلے ممبئی میں دو ماہ کا وقت گزارنے کے بعد آئندہ 31دسمبر کو مقامی تھانہ حلقہ واقع موضع کٹیا کلیم اللہ کی بیٹی کی ہونے والی شادی(یعنی اپنے سسرال میں )شرکت کے لئے ممبئی کشی نگر ایکسپریس سے خلیل آباد اشٹینش پر آج صبح پہونچے تھے کہ موضع کٹیا آکاش ولد پرماتما اپنی بولیرو نمبر UP67H 8725 پر مقامی حلقہ کے کٹیا گاوں شہنواز ولد کلیم اللہ عمر 22 سال ارمان ولد کلیم اللہ عمر 16 برس محسنہ زوجہ ضیاالحق کو بولیرو میں بیٹھاکر کٹیا گاوں لے کر جارہے تھے ، کہ اسی دوران بستی ڈپو کی روڈ ویز بس نمبر PU53 CT 2557

گورکھپور ضلع کے پڑیا گھاٹ سے کچھا کچھ مسافروں سے بھری سکری گنج رام جانکی سڑک سے دھن گھٹا ہوتے ہوئے دھلی جارہی تھی کی اسی دوران مقامی تھانہ حلقہ واقع موضع پرساد پور کے قریب گھنے کہرے کے سبب بولیرو اور روڈ ویز بس کی ہوئی آمنے سامنے کی زبردست ٹکر میں بولیرو کے پرکچھے اڑنے کے ساتھ ہی ساتھ بولیرو میں سوار ضیاالحق کی موقع پر ہی دردناک موت واقع ہوگئی بقیہ بولیرو میں مذید سوار

شہنواز ولد کلیم اللہ عمر 22 سال ارمان ولد کلیم اللہ عمر 16 برس محسنہ زوجہ ضیاالحق ڈرائیور آکاش شدید زخمی ہو گئے ہیں جس میں ڈرائیور آکاش اور محسنہ زوجہ ضیاالحق کی حالت نازک بنی ہوئی ہے ادھر روڈ ویز بس میں سوار مسافر

گورکھپور ضلع کے 18 سالہ آکاش ولد سورج ،پرکاش، مقامی تھانہ حلقہ کے بشنپوروا16 سالہ ستیم حنا زوجہ اجے موضع کنیلا اور 21 سالہ یوگیش ولد نرسنگھ بولیرو اور بس میں سوار کل 9 افراد زخمی ہو گئے ہیں کچھ زخمیوں کا علاج ضلع اسپتال تو کچھ زخمیوں کو میڈیکل کالج گورکھپور میں علاج کے لئے بھرتی کرایا گیا ہے۔