جمعرات, 6, اکتوبر, 2022
ہوماعلان واشتہاراتجمعیۃ علماء یوپی کے صدر کی اہلیہ کاانتقال

جمعیۃ علماء یوپی کے صدر کی اہلیہ کاانتقال

  1. *جمعیۃ علماء اترپردیش کے صدر مولانا عبدالرب اعظمی کو صدمہ. اہلیہ کا انتقال پر ملال*
    *صدر جمعیۃ علماء ہند مولانا محمود مدنی کا اظہار تعزیت*
  2. لکھنؤ 13 /ستمبر.
    آج 13 ستمبر کو علی الصباح جمعیۃ علماء اترپردیش کے صدر اور جامعہ عربیہ انوار العلوم جہانا گنج اعظم گڑھ کے ناظم اعلیٰ مولانا عبدالرب اعظمی کی اہلیہ کا انتقال پرملال ہوگیا. وہ اعظم گڑھ کے ایک ہسپتال میں زیرعلاج تھیں. انتقال سے دس روز قبل 3/ستمبر کو شب میں انہیں برین ہیمبریج ہوگیا تھا. ان کی طبیعت جب ناساز ہوئی تو اس وقت مولانا اعظمی جمعیۃ علماء اترپردیش کے انتخابی اجلاس میں شرکت کے لئے امروہہ میں تھے. اسی اجلاس، منعقدہ 4/ستمبر میں مولانا اعظمی صوبائی صدر منتخب ہوئے. دوران اجلاس ہی مولانا اعظمی گھر کے لئے روانہ ہوگئے تھے .
  3. مرحومہ کی صحت یابی کے لئے ان کے اہل خانہ کی جانب سے انتھک کوششیں اور ملک بھر میں دعائیں کی گئیں لیکن وقت موعود آگیا اور آج داغ مفارقت دے گئیں .اسی روز بعد نماز عصر تدفین ہوئی.
  4. اس موقع پر جمعیۃ علماء ہند کے صدر مولانا محمود اسعد مدنی، ناظم عمومی مولانا حکیم الدین قاسمی اور جمعیۃ علماء اترپردیش کے ناظم اعلیٰ مولانا سید محمد مدنی نے مولانا عبدالرب اعظمی کی اہلیہ محترمہ کے سانحہ ارتحال پرگہرے رنج و قلق کا اظہار کیا۔مرحومہ صوم وصلوۃ کی پابند اور دیندار گھریلو خاتون تھیں اور گھریلو نظم و نسق کی ذمہ داریاں بحسن و خوبی نبھا رہی تھیں. ان کے سانحہ ارتحال سے گھر میں ایک بڑا خلا پیدا ہوگیا ہے.
  5. صوبائی جمعیۃ کی جانب سے مولانا عبدالرب اعظمی، مرحومہ کے فرزندان اور دیگر لواحقین کے ساتھ اظہار تعزیت کرنے والوں میں سید محمد حسین ہاشمی، پروفیسر سید محمد نعمان، مولانا کلیم اللہ قاسمی، مولانا عبدالمعید قاسمی،مولانا امین الحق عبداللہ قاسمی قابل ذکر ہیں. مولانا سید محمود مدنی نے جماعتی احباب سے ایصال ثواب کی گزارش، نیز دعاء کی ہے کہ اللہ رب العزت مرحومہ کی مغفرت فرمائے اور ان کو جنت الفردوس میں درجات علیا سے نوازے۔
روزنامہ نوائے ملت
روزنامہ نوائے ملتhttps://www.nawaemillat.com
روزنامہ ’نوائے ملت‘ اپنے تمام قارئین کو اس بات کی دعوت دیتا ہے کہ وہ خود بھی مختلف مسائل پر اپنی رائے کا کھل کر اظہار کریں اور اس کے لیے ہر تحریر پر تبصرے کی سہولت فراہم کی گئی ہے۔ جو بھی ویب سائٹ پر لکھنے کا متمنی ہو، وہ روزنامہ ’نوائے ملت‘ کا مستقل رکن بن سکتے ہیں اور اپنی نگارشات شامل کرسکتے ہیں۔
کیا آپ اسے بھی پڑھنا پسند کریں گے!

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں

- Advertisment -spot_img
- Advertisment -
- Advertisment -

مقبول خبریں

حالیہ تبصرے