جمعیة علماے نیپال کی انتخابی میٹنگ 11/ستمبرکو ووٹنگ کےلیے جمعیة علماء ضلع روتہٹ کی ایک خصوصی میٹنگ کا انعقاد! انوار الحق قاسمی

39

جمعیة علماے نیپال کی انتخابی میٹنگ 11/ستمبرکو
ووٹنگ کےلیے جمعیة علماء ضلع روتہٹ کی ایک خصوصی میٹنگ کا انعقاد!
انوار الحق قاسمی
جمعیة علماے نیپال ایک اصولی اور دستوری تنظیم ہے ،اس تنظیم کے قیام کو تقریبا 15/سال ہوچکےہیں،یہ اپنے ابتداے قیام ہی سے مسلمانوں کی اعلا قیادت کرتی آرہی ہے۔
شروع سےاب تک اس کی صدارت استاذ العلما ،ہردل عزیز عالم دین حضرت اقدس مولانا عبدالعزیز صاحب صدیقی -اطال اللہ عمرہ-کرتے آرہےہیں اور امید قوی ہے کہ تادم حیات حضرت ہی اس کی صدارت فرمائیں گے۔
اوراس کی اصل قیادت تو بے مثال قائد ،معروف عالم دین حضرت مولانا محمد خالد صدیقی صاحب -زیدمجدہم-جنرل سکریٹری جمعیة علماے نیپال کررہےہیں۔
حضرت ہی نے اپنے جملہ ذمہ داران و مرکزی ممبران کے تعاون کے ذریعہ “جمعیة علماے نیپال” کا تعارف ملک کے کونے کونے میں کرایا،انھیں کی محنت اور جدوجہد کا آج خاص اثر یہ نظر آتاہےکہ “جمعیت علماے نیپال “کو عام مسلمان اور سیاسی قائدین کے علاوہ غیر مسلموں کی ایک بڑی تعداد بخوبی جانتی ہے اور اس کے اثر ورسوخ کو مانتی ہے۔
ہر تنظیم کو منظم طریقے پر چلانے کے لیے چند سالوں پر صدور و نظما اور مرکزی ممبران کا انتخاب کیاجاتاہے ،تاکہ تنظیم خوش اسلوبی کے ساتھ اپنے مقاصد کے حصول کی طرف رواں دواں رہے،اسی طرح” جمعیة علماے نیپال” کو عمدگی اور بہتری کے ساتھ چلانے کے لیےہر چار سال پر اس کے صدور ونظما اور مرکزی ممبران کا انتخاب کیاجاتاہے۔
ضابطہ تو یہی ہے کہ ہر چار سال کے بعد جمعیة کا انتخاب عمل میں آجاناچاہیے، مگر اس دفعہ مہلک و متعدی مرض کرونا وائرس کی وجہ سے انتخاب میں کچھ تاخیر ہوگئی ہے۔
مگر اب بحمدہ تعالی حالات کچھ بہتر ہوئے ہیں،تو 11/ستمبر کو ضلع روتہٹ کی مشہور شہرچندر نگاہ پور کی جامع مسجد میں بعد نماز مغرب “انتخابی میٹنگ” رکھی گئی ہے ۔
اگر یہ انتخاب بلاووٹنگ احسن طریقے پر ہو گیا ،تو فبہا؛ورنہ جملہ ذمہ داران و مرکزی ممبران کے علاوہ ہر ضلع سے باعتبار آبادی کہیں سے پندرہ، کہیں سے دس،کہیں سے پانچ اور کہیں سے تین افراد ووٹ دینےکے مجاز ہوں گے۔
واضح رہے کہ ہر ضلع والوں کے لیے ضروری ہے کہ وہ جلد سے جلد ووٹ دینے والے افراد کی تعیین کرکے ان کے اسما حضرت مولانا حیدر صاحب کے پاس بھیج دیں،تاکہ انتخاب سے چند دنوں قبل ان کے نام انتخابی میٹنگ میں شرکت کے لیے”لیٹر” آسکے۔
ووٹنگ کے لیے پندرہ افراد کی تعیین اور انتخابی میٹنگ کے انتظام و انصرام کےلیے کل بتاریخ 5/محرم الحرام 1443ھ مطابق 15/اگست 2021ء بروز اتوار کو بعد نماز ظہر معہد ام حبیبہ رضی اللہ عنہا للبنات جینگڑیا میں “جمعیة علماء ضلع روتہٹ” کی ایک خصوصی میٹنگ منعقد ہوئی،جس کی صدارت انجنئیر عبدالجبار صاحب نے فرمائی۔
مجلس کاآغاز حضرت مولانا قاری اسرارالحق صاحب قاسمی کی تلاوت قرآن سےہوا،اور شان رسالت میں نذرانۂ عقیدت قاری انعام الحق( متعلم درجہ عربی ہفتم دارالعلوم / دیوبند) نے پیش کیا۔
پھر میٹنگ اپنے مقصد کی طرف گام زن ہوگئی اور باتفاق آرا ووٹنگ کےلیے مندرجہ ذیل اسما کی تعیین کی گئی:
مولانا محمد جواد عالم مظاہری،مولانا رحمت اللہ مدنی،مفتی امجد قاسمی دھنہاری،قاری شہاب الدین عرفانی ،قاری ساجد مٹھیا، مولانا اسلم جمالی قاسمی،قاری بشیر الدین عرفانی، مولانا نذر عالم، مولانا صابر مظاہری،مولانا عبد الودود امام مسجد سنت پور،مولانا رحمت اللہ ملہنیا،مولانا رحمت اللہ امام مسجد گئور،قاری اسرافیل بلوا،مولوی اعجاز اسلام پور،مکھیا سلیم اللہ گھیورا،جباب اطیع اللہ لچھمی پور،جناب ذوالفقار چپور،مولوی عبدالقیوم چپور،قاری فیاض مٹھیا۔
انتخابی میٹنگ کے انتظام و انصرام کے لیے بتاریخ 7/محرم الحرام 1443ھ مطابق 17/اگست 2021ء بروز منگل کو “چندر نگاہ پور” میں چند افراد پر مشتمل ایک میٹنگ رکھی گئی ہے۔
میٹنگ میں شرکت کرنے والے حضرات کے اسماے گرامی:مولانا محمد عزرائیل مظاہری،قاری محمد حنیف عالم مدنی،انجینئر عبد الجبار، مولانا اسعد اللہ مظاہری،مولوی درخشید انور،مفتی محمد شمیم مکی،مولانا محمد جواد عالم مظاہری،مولانا محمد صابر مظاری،قاری شہاب الدین عرفانی،قاری ومولانا اسرارالحق قاسمی، قاری بشیر الدین عرفانی،مولانا نذر عالم،قاری فیاض مٹھیا،مولانا روشن مظاہری، راقم :انوار الحق قاسمی۔