جمعرات, 6, اکتوبر, 2022
ہوماعلان واشتہاراتبچوں کو دینی تعلیم سے آراستہ کرنا وقت کا اہم تقاضہ۔ مفتی...

بچوں کو دینی تعلیم سے آراستہ کرنا وقت کا اہم تقاضہ۔ مفتی محمد طاہر قاسمی

کیئوٹی دربھنگہ (ثاقب سیف قاسمی)

جناب محمد اصغر صاحب کی رہائش گاہ مہسول پوروی وارڈ نمبر 2 سیتامڑھی میں جناب مفتی محمد طاہر صاحب کی صدارت میں بچوں کا مسابقتی پروگرام کا انعقاد کیا گیا، اس موقع پرجناب مولانا سرفراز احمد صاحب نے فرمایا کہ جو بچے اچھی کارکردگی پیش کررہے ہیں انہیں مبارکباد دیتا ہوں، اور جو بچے اس تعلیم سے دور ہیں ان سبھوں کو دینی تعلیم سے جوڑنے کی کوشش کی جائے، اور جناب قاری ایاز احمد صاحب ناظم شعبہ تنظیم وترقی جامعہ مدینہ سبل پور پٹنہ نے اپنے تاثرات میں فرمایا کہ ہر محلہ میں عصری علوم کے ساتھ ساتھ دینی مکاتب کو فروغ دینے کی کوشش کی جائے، اور اس کے لئے ہم سب کو کام کرنے کی ضرورت ہے اور عوام الناس کو اس کی افادیت سے روشناس کرایا جائے۔ جناب مولانا عقیل احمد صاحب قاسمی امام وخطیب عید گاہ مسجد مہسول نے طلبہ عزیز کی محنت ولگن کو سراہتے ہوئے کہا کہ ان تمام بچوں کی والدہ بھی مبارک باد کے مستحق ہیں کہ انہوں نے اپنے بچوں میں دین کا جذبہ پیدا کیا، اور اس سے معاشرے کے تمام والدین کو سبق لینے کی ضرورت ہے، ساتھ ہی شریک طلبہ عزیز کو اپنی دعاؤں سے نوازا۔ اس پروگرام کی کامیابی کے لئے جناب قاری وقار احمد صاحب، جناب ساجد حسین صاحب سکریٹری نیتی فاؤنڈیشن، جناب مولانا توصیف احمد صاحب کی محنت سے یہ پروگرام کامیابی سے ہمکنار ہوا۔ عزیزم حسان احمد نے اول نمبر حاصل کئے، عزیزم سعدان وحفصہ سلمہا نے دوم نمبر حاصل کئے جبکہ عزیزم حبان احمد و ریان طاہر، وعزیزہ ہادیہ توصیف، عفان، ذکوان نے سوم نمبر حاصل کیۓ، پوزیشن حاصل کرنے والے طلبہ کو جناب محمد قاسم صاحب اور جناب محمد اصغر رضا صاحب اور دیگر حضرات کی جانب سے انعامات سے نوازا گیا۔ جناب مولانا عقیل احمد صاحب قاسمی،جناب قاری ایاز احمد صاحب، جناب مولانا سرفراز احمد صاحب، جناب مولانا توصیف احمد صاحب، جناب ساجد حسین صاحب، جناب قاری وقار احمد صاحب، جناب عبداللہ رحمانی صاحب اور شہر کے دیگر حضرات نے شرکت فرمائی، تمام لوگوں نے طلبہ عزیز کو دعائیں دیں، اور اس میں حصہ لینے والے تمام طلبہ عزیز کو عمومی انعامات سے نوازا گیا۔

توحید عالم فیضی
توحید عالم فیضیhttps://www.nawaemillat.com
روزنامہ ’نوائے ملت‘ اپنے تمام قارئین کو اس بات کی دعوت دیتا ہے کہ وہ خود بھی مختلف مسائل پر اپنی رائے کا کھل کر اظہار کریں اور اس کے لیے ہر تحریر پر تبصرے کی سہولت فراہم کی گئی ہے۔ جو بھی ویب سائٹ پر لکھنے کا متمنی ہو، وہ روزنامہ ’نوائے ملت‘ کا مستقل رکن بن سکتے ہیں اور اپنی نگارشات شامل کرسکتے ہیں۔
کیا آپ اسے بھی پڑھنا پسند کریں گے!

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں

- Advertisment -spot_img
- Advertisment -
- Advertisment -

مقبول خبریں

حالیہ تبصرے