ہفتہ, 8, اکتوبر, 2022
ہوماعلان واشتہاراتامارت شرعیہ کی جانب سے ضلع کھگڑیا کے گوگری بلاک میں چار...

امارت شرعیہ کی جانب سے ضلع کھگڑیا کے گوگری بلاک میں چار سو سیلاب متاثرہ خاندان کے درمیان راحتی اشیاء کی تقسیم

بلا تفریق مذہب انسانیت کی خدمت کرناامارت شرعیہ کی پہچان : مولانا انیس قاسمی

بلا تفریق دین و مذہب صرف انسانیت کی بنیاد پر خدمت خلق امارت شرعیہ کا خصوصی امتیاز رہا ہے ، اور اپنے قیام کے وقت سے ہی ضرورت مندوں اور پریشان حال لوگوں کی مدد کا سلسلہ جاری ہے ،خواہ آفات سماویہ ہو یا انسانوں کے ہاتھوں لائی گئی مصیبت ہو ، امارت شرعیہ نے ہمیشہ مجبور اور بے کس لوگوں کی خبر گیری اور ان کے دکھوں کا درماں کرنے کواپنا فرض اولین بنایا ۔ ملک کے کسی بھی حصہ میں سیلاب آیا، یا آتش زدگی ہوئی ، یا زلزلہ آیا یا فرقہ وارانہ فسادات ہوئے، یا ماب لنچنگ کے واقعات پیش آئے، ہر موقع پر امارت شرعیہ متاثرین کی مدد کے لیے کھڑی رہی ، خواہ رانچی، بھاگل پور، میرٹھ، مظفر نگر، آسام یا گجرات فساد کا موقع ہو، یا کچھ اور بھج و نیپال میں آیا زلزلہ، کشمیر اور کیرل کا سیلاب ہو یا وشاکھا پٹنم کی سونامی،یا کوسی میں آیا تاریخ کا بھیانک ترین سیلاب ہر جگہ امارت شرعیہ کی ریلیف ٹیم آپ کو خدمت کرتی مل جائے گی۔کیوں کہ مصیبت زدہ کی مدد کرنا ایمانی واخلاقی فریضہ اور اسلامی تعلیمات کے اعتبار سے بڑا کار خیر اور اس کا عنوان جلی ہے۔
اس اہم پیغام کو سامنے رکھتے ہوئے حسب ہدایت حضرت مولانا محمد شمشاد رحمانی نائب امیر شریعت اور امارت شرعیہ کے قائم مقام ناظم مولانا محمد شبلی قاسمی کی خصوصی توجہ سے اس وقت بھی امارت شرعیہ کی کئی ریلیف ٹیمیں بہار کے مختلف سیلاب زدہ علاقوں میں متاثرین کی امداد کے لیے پہونچی ہوئی ہیں ۔ اسی ضمن میں مولانا قمر انیس قاسمی معاون ناظم امارت شرعیہ کی قیادت میں ایک ریلیف ٹیم ضلع کھگڑیا کے گوگری جمال پور بلاک میں واقع بورنا خورد و بورنا کلا ں اور رام پور پورب گاؤں میں آئے زبردست سیلاب سے متاثر افراد کے درمیان راحت رسانی کا سامان لے کر پہونچی اور متاثرین کی امداد کر رہی ہے، اس وفد میں مولانا مزمل حسین قاسمی مبلغ امارت شرعیہ اور قاضی ارشد صاحب قاضی شریعت دار القضائ گوگری بھی شامل ہیں ۔ اس سے قبل ضلع پورنیہ میں ریلیف کا کام ہو چکا ہے ، جبکہ دوسری ریلیف ٹیم مولانا احمد حسین قاسمی صاحب معاون ناظم امارت شرعیہ کی قیادت میں بھاگل پور کے سیلاب متاثرین کے درمیان راحت رسانی کے لیے جا رہی ہے۔
ضلع کھگڑیا کے گوگری جمال پور بلاک میں واقع بورنا خورد و بورنا کلا ں اور رام پور پورب گاؤں میں امارت شرعیہ کی ریلیف ٹیم سیلاب متاثرین کے درمیان کپڑے اور خورد و نوش کی اشیائ کے ساتھ پہونچی اور بلا تفریق دین ومذہب انسانیت کی بنیاد پر چار سو سے زائد خاندانوں میں کپڑے اور راشن کٹ تقسیم کیا۔ قاری محمد سرفراز جنرل سیکرٹری ضلع کھگڑیا کی کوشش سے متاثرین کی فہرست مولانا مزمل حسین قاسمی مبلغ امارت شرعیہ کو دی گئی، متاثرین کی صحیح تعداد اور سیلاب کی صحیح صورت حال مولانا موصوف نے مولانا زین الحق اور حافظ محمد امتیاز رحمانی کے توسط سے نائب امیر شریعت اور قام مقام ناظم تک پہونچا یا۔ حضرت نائب امیر شریعت نے بلا کسی تاخیر کے ریلیف کے رقم کی منظوری دی اور آج ان متاثرین کے درمیان وفد نے یہ راحتی اشیاء تقسیم کیے۔ ریلیف تقسیم میں جناب نیاز احمد مولانا سفیان مظاہری بھائی اعجاز بورنا مولانا صابر قاسمی امام جامع مسجد چھوٹی بورنا قاری محمد مبارک امام جامع مسجد بورنا کلاں موجود رہے ۔
امارت شرعیہ کے قائم مقام ناظم مولانا محمد شبلی القاسمی صاحب نے اہل خیر حضرات سے اپیل کی ہے کہ اس وقت بہار کے کئی اضلاع سیلاب سے متاثر ہیں اور وہاں راحت رسانی کی ضرورت ہے ، امارت شرعیہ کا سارا ریلیف ورک اہل خیر کے تعاون سے ہی پورا کیا جاتا ہے ، اس لیے اہل خیر حضرات امار ت شرعیہ کے ریلیف ورک میں بڑھ چڑھ کر حصہ لیں اور اپنا تعاون امارت شرعیہ کے ریلیف فنڈ میں دیں ، تاکہ بر وقت متاثرین تک زیادہ سے زیادہ مدد پہونچائی جا سکے۔

روزنامہ نوائے ملت
روزنامہ نوائے ملتhttps://www.nawaemillat.com
روزنامہ ’نوائے ملت‘ اپنے تمام قارئین کو اس بات کی دعوت دیتا ہے کہ وہ خود بھی مختلف مسائل پر اپنی رائے کا کھل کر اظہار کریں اور اس کے لیے ہر تحریر پر تبصرے کی سہولت فراہم کی گئی ہے۔ جو بھی ویب سائٹ پر لکھنے کا متمنی ہو، وہ روزنامہ ’نوائے ملت‘ کا مستقل رکن بن سکتے ہیں اور اپنی نگارشات شامل کرسکتے ہیں۔
کیا آپ اسے بھی پڑھنا پسند کریں گے!

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں

- Advertisment -
- Advertisment -

مقبول خبریں

حالیہ تبصرے